مختلف ممالک کے 10 عجیب و غریب قوانین

دنیا کے کچھ ممالک میں ایسے قوانین رائج ہیں جن کے بارے میں پڑھ کر آپ اپنی ہنسی نہیں روک پائیں گے۔

لاہور: (ویب ڈیسک) ہر ملک کا اپنا ایک قانون ہے جس کی پاسداری اس کے شہریوں پر فرض ہے۔ یہ قوانین انسان کی فلاح و بہبود کے لئے ہی بنائے جاتے ہیں، مگر دنیا کے بعض ممالک میں کچھ ایسے بھی قوانین رائج ہیں جن کے بارے میں پڑھ کر انسان کے منہ سے ہنسی کا فوارہ شروع ہو جاتا ہے۔ آئیے ایسے دس قوانین کے بارے میں پڑھتے ہیں۔

یہاں چیونگ گم چبانا منع ہے

اگر آپ سنگاپور کا سفر کر رہے ہیں تو اپنے سامان سے چیونگ گم کا ڈبہ نکال دیں کیونکہ سنگاپور میں چیونگ گم چبانا منع ہے۔ اگر آپ وہاں چیونگ گم چباتے پکڑے گئے تو بھاری جرمانہ ہو سکتا ہے۔

اپنی بچوں کو حکومت سے منظور شدہ نام دیں

ڈنمارک میں آپ اپنے بچے کو کوئی ایسا نام نہیں دے سکتے جو حکومت کی منظور شدہ بچوں کے نام کی فہرست میں موجود نہ ہو۔ ڈنمارک کی حکومت نے 7000 ناموں پر مبنی بچوں کے نام کی ایک فہرست بنائی ہوئی ہے۔ ڈنمارک کے باسی اپنے بچوں کو نام اسی فہرست کے مطابق دے سکتے ہیں۔

خبردار! پیڈل سے پاؤں مت ہٹائیں

اگر آپ میکسیکو کی گلیوں میں کبھی سائیکل چلائیں تو پیڈل سے کبھی پیر مت ہٹائیے گا۔ میکسیکو میں ایسا کرنے والے افراد کو سخت سزا دی جاتی ہے۔ آپ سائیکل کے ہینڈل پر سے ہاتھ اٹھا سکتے ہیں، مگر سائیکل چلاتے ہوئے اپنے پائوں پیڈل پر مضبوطی سے جمائے رکھیں۔

کبوتروں کو دانہ ڈالنا منع ہے

وینس کے سینٹ مارک سکوئیر میں کبوتروں کو دانہ ڈالنے پر 700 ڈالرز تک جرمانہ ہو سکتا ہے۔ وینس نے یہ قانون اس لئے بنایا ہے کیونکہ ان کے مطابق کبوتر انسان کی صحت کو سخت نقصان پہنچاتے ہیں اور اس کے ساتھ ساتھ ان کی موجودگی عوامی جگہات کی کوبصورتی کو بھی متاثر کرتی ہے۔
ہیل والے جوتے گھر چھوڑ دیں

یونان کے کئی تاریخی مقامات پر ہیل والے جوتے پہننا منع ہے۔ حکومت کے مطابق ہیل والے جوتے تاریخی مقامات کو نقصان پہنچا سکتے ہیں۔

پرتگال کے سمندر میں پیشاب کرنا جرم ہے

یہ ایک دلچسپ قانون ہے۔ پرتگال کے سمندر میں پیشاپ کرنا منع ہے۔ ہمیں یہ معلوم نہ ہو سکا کہ اس قانون کے تحت ابھی تک کسی کو سزا بھی دی گئی ہے یا نہیں کیونکہ ملزم پر اس جرم کے تحت فرد عائد کرنا کافی مشکل نظر آتا ہے۔

پانی والی بندوق آپ کو جیل لے جا سکتی ہے

کمبوڈیا میں نئے سال کے جشن پر پانی والی بندوقوں کا استعمال منع ہے۔ 2001ء میں کمبوڈیا کے ایک گورنر نے یہ فیصلہ جاری کیا تھا۔

موٹاپا اب ایک جرم ہے

جاپان میں موٹاپا جرم ہے۔ جی ہاں! جاپان کے ایک قانون کے مطابق ہر 40 سال اور اس سے زیادہ عمر کے افراد کے لئے لازم ہے کہ وہ اپنے وزن کا خاص خیال رکھیں۔ مردوں کی کمر 32 انچ اور خواتین کی کمر 36 انچ سے زیادہ نہیں ہونی چاہیے۔

چرچ کی سیڑھیوں پر بیٹھ کر نہ کھائیں

اٹلی کے شہر فلورنس میں چرچ کے اندر یا اس کی سیڑھیوں پر بیٹھ کر کچھ بھی کھانا پینا منع ہے۔ اسی طرح وہاں کی کسی بھی عوامی عمارت کے اردگرد کھانا منع ہے۔

مالدیپ میں بائبل لانا منع ہے

مالدیپ میں اسلام کے علاوہ کسی بھی مذہب کے پیروکاروں کو عوامی جگہات پر اپنے مذہب کے مطابق عبادت کرنے کی اجازت نہیں ہے۔ مالدیپ کی حدود میں بائبل لانا بھی ممنوع ہے۔