Saturday, April 21, 2018
Home > سائنس اینڈ ٹیکنالوجی > بارسلونا میں موبائل ورلڈ کانگریس سام سنگ کے 2 نئے فلیگ شپ فون ایس نائن اور ایس 9 پلس

بارسلونا میں موبائل ورلڈ کانگریس سام سنگ کے 2 نئے فلیگ شپ فون ایس نائن اور ایس 9 پلس

سام سنگ نے اپنی فلیگ شپ ایس سیریز کے 2 نئے فونز گلیکسی ایس 9 اور ایس نائن پلس متعارف کرادیئے ہیں۔
بارسلونا میں موبائل ورلڈ کانگریس کے موقع پر متعارف کرائے جانے والے گلاس اور میٹل ڈیزائن پر مبنی یہ دونوں فونز دیکھنے میں گزشتہ سال کے ایس ایٹ اور ایس ایٹ پلس جیسے ہی ہیں، یعنی ایک جیسی اسکرین اور راﺅنڈ کارنر وغیرہ۔تاہم اندر سے یہ فون پہلے سے زیادہ بہتر اور بالکل مختلف ہے۔ایک بار پھر سام سنگ نے اپنے فلیگ شپ فون دو مختلف اسکرین سائز میں پیش کیا گیا ہے۔
ایس نائن میں 5.8 انچ جبکہ ایس نائن پلس 6.2 انچ کی بڑی اسکرین کے ساتھ ہے اور دونوں فونز میں 18:5:9 ریشو سپرامولیڈ ڈسپلے کے ساتھ دیا گیا ہے اور دونوں مین ہی 2960×1440 ریزولوشن دیا گیا ہے۔مگر ایس نائن اسکرین میں 570 پکسل فی انچ جبکہ ایس نائن پلس میں 529 پکسل فی انچ دیئے گئے ہیں اور معیار بہت شارپ ہے۔
چھوٹی تبدیلیاں جو نمایاں فرق پیدا کریں گی
اس بار سام سنگ نے فنگرپرنٹ سنسر کو کیمرے کے نیچے زیادہ قابل رسائی مقام پر منتقل کردیا ہے کیونکہ ایس ایٹ میں یہ سنسر بہت اوپر تھا اور لوگوں کے لیے اس تک رسائی کافی مشکل تھی، ویسے تو بیک پر اس سنسر کو رکھنا مسائل کا باعث بنتا ہے مگر ایس نائن میں اسے کافی بہتر جگہ پر رکھا گیا ہے۔ اسی طرح ایس نائن اور ایس نائن پلس بھی اسٹیریو اسپیکرز کے ساتھ آئی فون سیون، ایٹ اور ایکس کے ساتھ گوگل پکسل ٹو کی صف میں شامل ہوگیا ہے۔ سام سنگ کے مطابق یہ اسپیکرز اے کے جی پر ٹیون ہوتے ہیں جبکہ ایس ایٹ کے مقابلے میں 1.4 گنا زیادہ لاﺅڈر ہیں، یہ اسپیکر ڈولبی ایٹموس تھری ڈٰ سمولیٹڈ سراﺅنڈڈ ساﺅنڈ کو بھی سپورٹ کرتے ہیں۔ سام سنگ نے فیس ان لاک کو بھی بہتر کیا ہے جسے گزشتہ سال کے ماڈل میں پہلی بار متعارف کرایا گیا تھا اور اب کی بار اس میں نیا انٹیلی جنٹ اسکین فیچر دیا گیا ہے، جو تاریکی میں بھی کام کرتا ہے جبکہ تیز چمک میں بھی چہرے کو شناخت کرسکتا ہے۔
کیمرہ
اس سال کے فونز میں سب سے بڑا اور نمایاں فیچر ان کا نیا کیمرہ سسٹم ہے، تاہم اس بار کمپنی نے ایس نائن کے بیک پر ایک جبکہ دوسرے میں ڈوئل کیمرہ سیٹ اپ دیا ہے۔ یہ نیا کیمرہ سام سنگ کا پہلا ایسا سیٹ اپ ہے جو مکینیکلی طور پر ایڈجسٹ ایبل آپرچر کے ساتھ ہے جو کہ بہت روشن ایف 1.5 سے لے کر چھوٹے ایف 2.4 پر سوئچ ہوسکتا ہے، جس کا انحصار ایکسپوزر کنڈیشن پر ہے۔ برائٹ آپرچر گزشتہ سال کے ایف 1.7 لینس کے مقبلے میں 28 فیصد زیادہ روشنی جذب کرسکتا ہے جبکہ ایف 2.4 آپرچر اوور ایکسپوزر کی روک تھام میں مدد دیتا ہے۔ کیمرہ ایپ خودکار طور پر بھی آپرچر بدل سکتی ہے جبکہ صارف اپنی مرضی سے بھی کنٹرول کرسکتا ہے، کسی اور فون میں اس طرح دو آپرچر کے آپشنز موجود نہیں۔
آپرچر سے ہٹ کر ایس نائن کے بارہ میگا پکسل کیمرہ سنسر میں ڈوئل پکسل آٹو فوکس ٹیکنالوجی تیز اور قابل انحصار فوکسنگ کے لیے دی گئی ہے، پہلے سے بہتر ملٹی فریم نوائز جو کم روشنی میں تصویر کو تیس فیصد زیادہ بہتر کرتی ہے، 960 فریم فی سیکنڈ سلوموشن ویڈیو ریکارڈنگ کے ساتھ کیمرہ ایپ میں مختلف موڈز پر منتقل ہونے کے لیے تیز ترین رسائی کو ری ڈیزائن کیا گیا ہے۔
ایس نائن پلس میں دوسرا کیمرہ دو آپرچر کا فیچر تو نہیں مگر یہ نوٹ ایٹ کے ڈوئل کیمرہ سسٹم جیسا ہی کام کرتا ہے۔ اس میں ایف 2.4 لینس دیا گیا ہے جو کہ وائیڈ اینگل کیمرے کے مقابلے میں سبجیکٹ کو دوگنا زیادہ قریب کرتا ہے ، جس سے پورٹریٹ موڈ جیسی دھندلے پس منظر والی تصویر لینے میں مدد ملتی ہے۔ دونوں فونز کے فرنٹ پر آٹھ میگاپکسل کا کیمرہ دیا گیا ہے جس میں ایف 1.7 آٹوفوکس لینس دیا گیا ہے۔
نئی کیمرہ ایپ میں سام سنگ نے آئی فون ایکس جیسے اینی موجی فیچر کو بھی شامل کیا ہے، جو کہ صارف کو اپنے چہرے کی تصویر لینے میں مدد دے کر اسے تھری ڈی ایموجی میں بدل دیتی ہے۔ یہ ایپ اٹھارہ اینیمیٹڈ جی آئی ایف اسٹیکرز تک رسائی دیتی ہے۔
ہارڈ وئیر
اگر تو آپ نے سام سنگ کے ان فونز کی لیکس کو دیکھا ہوگا تو پہلے سے ہی اس کے ہارڈوئیر اسپیسز جان کر زیادہ حیران نہیں ہوں گے، جیسے کوالکوم کا طاقتور ترین اسنیپ ڈراگون 845 پراسیسر (شمالی امریکا کے لیے جبکہ دیگر ممالک میں کمپنی کا اپنا ایکسینوس پراسیسر دستیاب ہوگا)، فور جی بی ریم (ایس نائن) یا سکس جی بی ریم (ایس نائن پلس)، 64 جی بی اسٹوریج جس میں مائیکرو ایس ڈی کارڈ سے اضافہ ممکن ہے۔ ایس نائن کے لیے 3000 ایم اے ایچ جبکہ ایس نائن پلس کے لیے 3500 ایم اے ایچ بیٹری دی گئی ہے۔ واٹر اور ڈسٹ ریزیزٹنٹ کے لیے آئی پی 68 ریٹنگ، فاسٹ وائرلیس اور فاسٹ وائر چارجنگ جبکہ انٹرنیٹ ڈیٹا کے لیے 1.2گیگابٹ بی پی ایس سپورٹ موجود ہے۔
سافٹ وئیر
جہاں تک سافٹ وئیر کی بات ہے تو ایس نائن سیریز اینڈرائیڈ اوریو آپریٹنگ سسٹم کے ساتھ ہوگی اور اس سے ہٹ کر سافٹ وئیر میں ایس ایٹ کے مقابلے میں کوئی زیادہ فرق نہیں دیا گیا۔ البتہ سام سنگ نے اپنے ڈیجیٹل اسسٹنٹ بیکسبی ایپ کے مختلف حصوں کو ری ڈیزائن ضرور کیا ہے، خصوصاً کیمرہ فیچرز کے لیے۔ ان دونوں فونز میں نوٹ ایٹ کے ساتھ پیش کیے جانے والے ورچوئل رئیلٹی ہیڈ سیٹ گیئر وی آر کام کرسکے گا جبکہ گوگل ڈے ڈریم ویو ہیڈسیٹ بھی مطابقت رکھتا ہے۔ اسی طرح یہ گزشتہ سال کے ڈیکس اسٹیشن پر بھی کام کرے گا، جو فون کو کسی مانیٹر ، کی بورڈ اور ماﺅس کے ساتھ فل کمپیوٹر کی طرح کام کرنے کی صلاحیت دیتا ہے، اسی طرح رئیل ٹائم ٹرانسلیشن کا فیچر بھی موجود ہے۔
قیمت اور دستیابی
یہ دونوں فونز سولہ مارچ سے دنیا کے مختلف ممالک میں صارفین کے لیے دستیاب ہوں گے، ایس نائن کی قیمت 720 ڈالرز (لگ بھگ اسی ہزار پاکستانی روپے) جبکہ ایس نائن پلس 840 ڈالرز (93 ہزار پاکستانی روپے سے زائد) میں فروخت کیے جائیں گے۔