اسپین میں ہوٹلوں نےسیاحو ں کے لئے کرائے کم کر دیئے

میڈرڈ (دوست نیوز) اسپین میں ہوٹلوں نے اپنے کرائے سیاحوں کے لئے کم کر دیئے۔حکام کا کہنا ہے کہ اقدام کا مقصد زیادہ سے زیادہ سیاح ترکی یا شمالی افریقہ کا رخ کرنے کے بجائے اسپین کی جانب راغب ہوں۔ اسپین کی معیشت میں شعبہ سیاحت سے حاصل آمدنی کا حصہ گیارہ فیصد ہے۔ گذشتہ سال ا سپین میں سیاحوں کی آمد 82ملین رہی تاہم 2016اور 2017کے مقابلے کم رہی۔ اس کے باوجود اسپین سیاحوں کے لئے دنیا کے دوسرے بڑے ملک کے مقام پر برقرار رہا۔ا سپین کے سرکاری اعداد و شمار کے مطابق 2013 سے 2017کے دوران سپین میں ہوٹلوں کے کرایوں میں 21.4فیصد اضافہ ہوا تاہم اب سیاحت میںا سپین کے حریف ممالک ترکی، تیونس اور مصر نے سیاحت کے فروغ کے لئے اپنے ہوٹلوں کے کرائے کم کر دیئے ہیں۔ا سپین کے جزائر بلیاریک میں میڈیم پرائس ہوٹلز نے اپنے کرائے 15فیصد تک کم کر دیئے ہیں جبکہ ترکی کے ہوٹلوں کے کرائے ان سے 73 فیصد تک کم ہیں۔ تیونس میں رواں سال کی پہلی ششماہی میں سیاحوں کی آمد کی تعداد میں 40فیصد اورا سپین میں سیاحوں کی آمد میں 1.8 فیصد اضافہ ہوا ہے۔ زیادہ تر یورپین سیاحوں نے وہاں کا رخ کیا