خوشگوار ازدواجی تعلقات طویل عمری کا باعث ہیں۔ امریکی تحقیق

امریکی ماہرین صحت کا کہنا ہے کہ خوش گوار ازدواجی تعلقات کے حامل جوڑے لمبی عمر پاتے ہیں۔ شادی شدہ افراد دل اور دماغ کے عوارض کا کم شکار ہوتے ہیں جب کہ ایسے افراد جو شادی نہیں کرتے ان کے ہاں اس طرح کی بیماریاں زیادہ ہیں۔امریکا میں 1970ء سے 2010ء تک جاری رہنے والی ایک تحقیق کی جس میں بتایا گیا ہے کہ ایسے افراد جنہوں نے عین جوانی کی عمر میں شادی کی اور ان کے باہمی تعلقات خوش گوار رہے۔ ان کی نصف تعداد دل اور دماغ کے عوارض سے محفوظ رہی ہے۔ جب کہ غیر شادی شدہ افراد میں ہڈیوں اور عضلات کی کم زوری کی شرح زیادہ ہے۔تحقیق کے مطابق خوش خوش زندگی گذارنے والے جوڑے 90 سال یا ا سے بھی زیادہ عرصے تک زندہ رہتے ہیں۔ ماہرین نے شادی کے انسانی صحت پرمرتب ہونے والے اثرات کا جائزہ لینے کے لیے 42 سے 67 سال کی عمر کے افراد کی زندگیوں کا جائزہ لیا۔ان کا چناو¿ اسکنڈے نیوین ممالک، مشرق وسطیٰ، شمالی امریکا اور ایشیا سے کیا گیا۔ ماہرین کا کہنا ہے کہنا ہے کہ ان میں سے آدھے لوگ ہڈیوں کی کمزوری کا شکار نکلے۔ ہڈیوں کی کمزوری کے شکار افراد کی زیادہ تعداد غیر شادی شدہ لوگوں پر مشتمل ہے، جبکہ شادی شدہ افراد میں یہ شرح بہت کم ہے۔