آسیہ کو باہر لے جانے میں مدد کرینگے : اٹلی، کینیڈین ٹی وی کی بھی سپانسر کرنیکی پیشکش

روم(دوست مانیٹرنگ دوست)اٹلی نے کہا ہے کہ وہ آسیہ بی بی کو پاکستان سے باہر منتقل کرنے میں مدد کرے گا، کیونکہ وہاں اس کی زندگی خطرے میں ہے ۔اطالوی ریڈیو سے گفتگو کرتے ہوئے اٹلی کے نائب وزیراعظم ماٹیو سالوینی نے کہا کہ وہ آسیہ بی بی اور اس کے بچوں کا اٹلی یا کسی بھی یورپی ملک میں محفوظ مستقبل چاہتے ہیں، اس سلسلے میں ان سے جوہو سکا وہ کریں گے ۔اس کیس پر اٹلی دیگر مغربی ملکوں کیساتھ محتاط رہتے ہوئے کام کر رہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اٹلی پاکستانی حکومت کے خلاف نہیں۔
اصل دشمن تشدد، انتہاپسندی اور تعصب ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ ہم 2018 ء میں رہ رہے ہیں اور یہ نہیں ہو سکتا کہ مفروضے پر کسی بے گناہ کی جان لے لی جائے ۔ادھر کینیڈا کے ممتاز بین المذاہب ٹی وی نے آسیہ بی بی کو سپانسر کرنے کی پیش کش کر دی۔ ٹی وی کے سی ای او لورنا ڈیوک نے وزیراعظم جسٹن ٹروڈو اور وزیر خارجہ کے نام خطوط میں زور دیا کہ وہ آسیہ بی بی کا کینیڈا میں خیرمقدم کریں۔ان کا ٹی وی آسیہ بی بی کے خاندان کو کینیڈا میں مکمل طور پر سپانسر کریگا۔ وزیراعظم آفس نے ٹی وی سے خط ملنے کی تصدیق کی ہے ۔