امریکا میں سعودی عرب کی خاتون سفیرشہزادی ریما بنت بندر کون ہیں؟

سعودی فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز آل سعود نے شاہی خاندان کی شہزادی ریما بنت بندر بن سلطان بن عبدالعزیز آل سعود کو امریکا میں سفیر مقرر کیا ہے۔ سفیر مقرر ہونے سے انہیں سعودی عرب میں وزیر کا پروٹوکول حاصل ہوگا۔شہزادی ریما بنت بندر ولی عہد کے دفتر میں ان کی مشیرہ رہ چکی ہیں۔ اس کے علاوہ انہوں نے جنرل سپورٹس اتھارٹی کی پلاننگ اینڈ ڈویلپمنٹ کی سیکرٹری کے عہدے پرکام کر چکی ہیں۔انہوں‌ نے سنہ 1999ء میں امریکا کی جارج واشنگٹن یونیورسٹی کے ماونٹ فیرون سے آرٹس میں گریجوایشن کی۔ سعودی عرب میں متعدد سرکاری اسپورٹس کمیٹیوں کی سربراہ رہنے والی پہلی سعودی خاتون ہیں۔
شہزادی ریما نے تعلیمی اداروں میں بچیوں کے لیے اسپورٹس کی تعلیم متعارف کرائی اور خواتین کو اسپورٹس کے میدان میں اپنی صلاحیتوں کا لوہا منوانے کی ترغیب دی۔شہزادی ریما بنت بندر نے شہری فلاح وبہبود کے شعبے بالخصوص چھاتی کے کینسر کی روک تھام کے لیے گراں قدر خدمات انجام دیں۔
انہوں‌نے چھاتی کے کینسر کی روک تھام کے لیے 10ksa کے عنوان سے کامیاب مہم چلائی جسے گینز بک آف ورلڈ ریکارڈ میں شامل کیا گیا۔ اس کے علاوہ انہوں نے ‘الف خیر’ کے عنوان سے بھی فلاحی مہم چلائی گئی۔فوربس جریدے نے حال ہی میں عرب دنیا کی 200 طاقت ور شخصیات کی فہرست شائع کی جس میں شہزادی بندر 16 ویں طاقت ور خاتون قرار پائی تھیں۔