سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ بارسلونا کے زیر اہتمام جلسہ بعثت رحمت عالم صلی اللہ علیہ والہ وسلم کا انعقاد

بارسلونا(دوست نیوز)سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ بارسلونا کے زیر اہتمام مقامی ریسٹورنٹ کے ہال میں جلسہ بعثت رحمت عالم صلی اللہ علیہ والہ وسلم کا انعقاد کیا گیا جس میں شیخ سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ و سربراہ تنظیم الاخوان پاکستان حضرت امیر عبدالقدیر اعوان مدظلہ العالی نے خطاب فرمایا۔ سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ کے اراکین کے علاوہ پاکستانی کمیونٹی کی بڑی تعداد نے شرکت کی اور پر مغز خطاب سے اپنے دلوں کو منور کیا۔
جلسہ بعثت رحمت عالم صلی اللہ علیہ والہ وسلم کاآغاز تلاوت قرآن مجید اور امیر محمد اکرم اعوان مرحوم رح کی نعت رسول مقبول صلی اللہ علیہ والہ وسلم سے ہوا۔ جس کی سعادت قدیر اے خان نے حاصل کی۔ محمد جہانگیر نے حضرت امیر عبدالقدیر اعوان مدظلہ العالی کا مختصر تعارف پیش کیا۔
حضرت امیر عبدالقدیر اعوان مدظلہ العالی نے اپنے خطاب میں کہا کہ ہم اس دنیا کی مصروفیت میں اس طرح گم ہو چکے ہیں۔کہ ہمیں وہ مقصد حیات جس کے لئے ہمیں اس دنیا میں اللہ کریم نے ایک امتحان کے لئے بھیجا اسے بھول گئے ہیں۔یہ وہ امتحان ہے جسکا نتیجہ ہر صورت نکلے گا۔ انسان دنیاوی زندگی میں اپنے اچھے یا برے اعمال کے ذریعے اپنے لئے جنت یا دوزخ کا انتخاب ہمیشہ ہمیشہ کے لئے کر رہا ہے۔اللہ تعالیٰ نے دنیا کو بہت خوبصورت بنایا لیکن ساتھ ہی ہدایت کے لئےانسان کے اندر ایک شیشہ فٹ کردیا گیا ہے۔ جس میں انسان کو اپنی ذات نظر آتی ہے۔ لیکن یہ تب ہوگا جب اس قلب اور روح کی صفائی اور تزکیہ قلب کیا جائے گا۔ ورنہ ساری زندگی دوسروں کی برائیوں پر نظر رہے گی۔ اور اپنی اصلاح کی فکر نہیں ہوگی۔ اندر باہر تاریکی ہی تاریکی نظر آتی ہے۔کسی بھی انسان کی اصلاح کے لئے اس کی بصارت سماعت اور بصیرت کا دنیاوی یا دینی تعلیمات کے لئے ان اعضا کا صحت مند ہونا ضروری ہے۔ صرف اپنی اصلاح کر لینے سے انسان کی ذمہ داری ختم نہیں ہوتی۔ کیونکہ جس طرح اپنی ذات پر اسلام کو نافذ کرنے کے بعد معاشرے کے لئے فائدہ مند بنتے ہیں اور دوسروں کو بھی اس کا حصہ بناتے ہیں ۔ ہم مغربی ممالک میں ان کے قانون پر عمل کرتے ہیں تو کیا ہماری ڈیوٹی اپنے گھر خاندان اور اپنے ملک میں قانون نافذ کرنے کے لئے اپنی کوشش کرنی چاہیئے۔ ہم نے اسلام کے لئے آج تک کیا کیا ہے؟کیا یہ ہم سے پوچھا نہیں جائے گا۔ ذاتی عبادات تو ٹریننگ تھی کہ ہم اسلام کو نافذ کرسکتے۔ ہمیں درد دل حاصل کرنے کی ضرورت ہے۔ جہاں سے ملے اس کے لئے کوشش کریں اور فکر کریں اگر درد دل کا ایک قطرہ بھی نصیب ہو جائے تو دنیا وآخرت کی ساری کامیابیاں نصیب ہوجائیں گی۔
جلسہ بعثت رحمت عالم صلی اللہ علیہ والہ وسلم کے انعقاد اور انتظامات میں محمد جمال ،محمد ثاقب حنیف اور دیگر کارکنان نے حصہ لیا اور جسلہ عام کو کامیاب بنایا۔حضرت امیر عبدالقدیر اعوان مدظلہ العالی نے جلسہ کے اختتام پر تمام پاکستانی کمیونٹی کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ میں آپ کے قیمتی وقت کا ممنون ہوں۔ آپ آئے اور میرے آقا علیہ السلام اور اللہ کی باتیں سنی ، اللہ تعالیٰ مجھے اور آپ تمام احباب کو دین اسلام پر عمل کرنے کی توفیق عطا فرمائے آمین۔