متاثرین سانحہ کرائسٹ چرچ کے لواحقین حج پر آئیں تو شاہی مہمان ہونگے: خادم الحرمین الشریفین

شاہ سلمان بن عبدالعزيزنے ہدایت جاری کی ہے کہ کرائسٹ چرچ کی دو مساجد پر دہشت گرد حملے میں شہید اور زخمی ہونے والوں کے اہل خانہ اور خاندان میں سے 200 عازمین حج کی رواں سال خصوصی میزبانی کی جائے سعودی فرماں روا شاہ سلمان بن عبدالعزيزنے ہدایت جاری کی ہے کہ نیوزی لینڈ کے شہر کرائسٹ چرچ کی دو مساجد پر دہشت گرد حملے میں شہید اور زخمی ہونے والوں کے اہل خانہ اور خاندان میں سے 200 عازمین حج کی رواں سال میزبانی کی جائے۔یہ اقدام حج اور عمرے کے سلسلے میں “مہمانانِ خادم حرمین شریفین” پروگرام کا حصہ ہے۔
سعودی خبر ایجنسنی SPA کے مطابق اس سالانہ پروگرام کی نگرانی اور اس پر عمل درآمد کی ذمہ داری اسلامی اُمور کی وزارت کے پاس ہے۔ سعودی وزیر برائے اسلامی امور شیخ ڈاکٹر عبداللطيف بن عبدالعزيزنے ایک اخباری بیان میں کہا کہ دہشت گردی کے اس المناک واقعے کے متاثرین کی میزبانی مملکت سعودی عرب کی اُن کوششوں کا حصہ ہے جو وہ دہشت گردی کا مقابلہ کرنے اور اس کے مرتکب افراد کے خلاف ڈٹ کر کھڑے ہونے کے سلسلے میں کر رہی ہے۔ اس نوعیت کی کارروائی تمام آسمانی کتابوں کی تعلیمات اور انسانی اقدار کی خلاف ورزی ہے۔