حج، عمرہ، وزٹ اور ٹرانزٹ ویزہ کی فیس 300 ریال مقرر

سعودی کابینہ نے حج، عمرہ، وزٹ اور ٹرانزٹ ویزہ کی فیسوں کا نیا شیڈول جاری کیا ہے جس میں ہر قسم کے ویزے کی فیس 300 ریال رکھی گئی ہے۔
مملکت آنے کے خواہش مند افراد کو جاری کئے جانے والے مختلف قسم کے ویزوں کی تفصیلات شائع کی ہیں۔ گذشتہ تین برسوں سے دوسرا عمرہ کرنے کے خواہش مند افراد 2000 ریال فیس ادا کر رہے تھے، جسے کابینہ نے اپنے حالیہ فیصلے میں منسوخ کر دیا ہے۔ویزہ سروس فراہم کرنے والے ذرائع کے مطابق حج اور عمرہ وزٹ ترتیب دینے والوں کو اپنے صارفین کو فراہم کردہ پیکیج میں صحت کی انشورنس، ٹرانسپورٹ کا انتظام اور ان کے ٹوکن ادائیگی کو یقینی بنانا ہوتا ہے۔
عمرہ فیس
وزیر حج وعمرہ اور ضیوف الرحمنٰ خدمت کمیٹی کے سربراہ ڈاکٹر محمد صالح بن طاھر بنتن نے خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز آل سعود اور نائب وزیر اعظم، وزیر دفاع اور ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کا شکریہ ادا کیا ہے کہ انھوں نے بار بار عمرہ ویزہ فیس وصولی کو منسوخ قرار دیا ہے۔سعودی پریس ایجنسی ’’ایس پی اے‘‘ سے بات کرتے ہوئے وزیر حج وعمرہ نے کہا کہ شاہی فرمان دراصل دنیا بھر سے حج اور عمرہ کی غرض مملکت آنے والے مسلمانوں کی آمد اور سفر کو باسہولت بنانے کی جانب ایک قدم ہے۔ نیز اس اقدام کے ذریعے سعودی عرب زیادہ سے زیادہ فرزندان توحید کو مملکت آنے کا موقع دینا چاہتا ہے تاکہ وہ مکہ المکرمہ اور مدینہ منورہ کے انتظامی ڈھانچے میں شاہی فرمان کی روشنی میں ہونے والی پیش رفت سے آگاہ ہو سکیں۔انھوں نے کہا اس فیصلے کا مقصد سعودی عرب میں روبعمل ویژن 2030 کے تحت 2030 تک ایک سال کے اندر 30 ملین متعمرین کو عمرہ کی سہولت فراہم کرنا ہے تاکہ وہ اللہ کے مہمانوں کے لئے سعودی عرب کی میزبانی سے استفادہ کر سکیں۔نائب وزیر حج وعمرہ ڈاکٹر عبدالفتاح بن سلیمان مشاط کا اس موقع پر کہنا تھا کہ مملکت دنیا بھر سے متعمرین کو سعودی عرب سہولت اور وقار کے ساتھ لانے کی کوششوں میں کوئی کمی نہیں کریں گے تاکہ دنیا بھر سے فرزندان توحید مناسک ادا کرنے آ سکیں