حمزہ علی ایک قابل فخر نوجوان۔۔نصراللہ چوہدری

قابلیت کسی کی میراث نہیں اوورسیزپاکستانیوں کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ یہ غلط طریقوں سے بیرون ممالک جاتے ہیں اور پاکستان کا نام بدنام کرتے ہیں لیکن حصول معاش کے لیے جانے والے خطروں کے کھلاڑی اپنی آیندہ نسل سے مایوس نہیں بھمبھررسے تعلق رکھنے والے پاکستانی پڑھے لکھے نوجوان محمد علی جہنوں نے بارسلونا اور اس کے گردونواح سے تعلق رکھنے والے سینکڑوں نیہں ھزاروں نوجوانوں کو ڈرائیونگ لائسنس کروا چکے ہیں ایشین ڈرائیونگ سکول کے نام سے ادارہ چلا تھے۔ بے شمار نوجوان باعزت طور پر ان کی دی ھوئی تعلم کی وجہ سے باعزت طور پرروز گار سیے وابستہ ھیں محمد علی کے بھانجھےحمزہ علی نے اٹلی میں رہتے ہوئے اپنے سکول میں 13 سو بچوں میں سے نہ صرف ٹاپ بلکہ ایک نیا ریکارڈ قائم کرنے میں کامیاب ہوگیا یہ نوجوان حمزہ علی ہے جس نے اپنی صلاحیتوں کی بدولت تھوڑی عمر میں بڑا کارنامہ سر انجام دیا ہے حمزہ علی کا تعلق گجرات کے نواحی گاوں بوکن سے ہے نوید علی صاحب کا یہ برخردار نہ صرف اپنے والدین بلکہ علاقہ بھر کے لوگوں کا فخر ہے نوید علی کا صرف یہی بیٹا نہیں بلکہ دوسرے بیٹےارسلا ن نے بھی گولڈ میڈل حاصل کر رکھا ہے اور ان کی ہمشیرہ نے بھی وکالت کی ڈگری حاصل کر رکھی ہے اور انھوں نے بھی گولڈ میڈل لے کر آس گھرانے کے تینوں قابل فخر جوانوں نے تاریخ رقم کی ہے ایسے بچے اپنے والدین کا فخر ہوتے ھیں اللہ تعالی اس فیملی کو مزید کامیابیاں دے جہنوں نے دیاد غیر میں رہتے ھوئے پاکستانیوں کے سر فخر سے بلند کر دیئے