موریطانیہ کے ایئرپورٹ پر پھنسے پاکستانیوں نے مدد کی اپیل کر دی

شمال مغربی افریقی مسلمان ملک موریطانیہ کے ایک ایئر پورٹ پر 10 پاکستانی سیاح محصور ہو گئے ہیں، مقامی حکام نے بغیر کسی وجہ انھیں روک لیا ۔تفصیلات کے مطابق موریطانیہ کے دارالخلافہ نواکشوط کے ایئرپورٹ پر 10 پاکستانی سیاح محصور بنا دئیے گئے ہیں، ایئر پورٹ حکام نے پاکستانیوں کو بغیر کوئی وجہ بتائے 36 گھنٹے سے روک رکھا ہے،موصولہ اطلاعات کے مطابق پاکستانی سیاحوں کو کھانے پینے کو بھی کچھ فراہم نہیں کیا گیا، محصور پاکستانی سیاحوں نے سفارتی مدد کے لیے اعلیٰ حکام سے فوری مدد کی اپیل کر دی ہے۔پاکستانی سیاحوں کا کہنا ہے کہ ان کے پاس ویزے موجود ہونے کے باوجود ایئر پورٹ حکام ان کی بات نہیں سن رہے ہیں، ایئر پورٹ حکام ملک میں انٹری نہ دینے کی وجہ بھی نہیں بتا رہے۔یاد رہے کہ 4 نومبر کو ٹورنٹو سے کراچی آنے والی پی آئی اے کی پرواز فنی خرابی کے باعث روانہ نہ ہو سکی تھی، بوئنگ 777 طیارہ فنی خرابی کا شکار ہوا تھا جس کی وجہ سے مسافر ٹورنٹو ایئرپورٹ پر پھنس گئے تھے، پرواز کی روانگی میں 24 گھنٹے سے زیادہ کی تاخیر ہوئی۔طیارے کے پرزہ جات نہ ہونے کی وجہ سے فنی خرابی دور نہیں کی جا سکی تھی، بتایا گیا تھا کہ طیارے کے پارٹس اگلے دن پاکستان سے کینیڈا کے لیے روانہ کیے جانے تھے۔