ترک اسکولوں کے قیام کا منصوبہ، جرمنی میں بحث

جرمنی میں تین ترک اسکولوں کے قیام کے منصوبے پر جرمنی میں زبردست بحث جاری ہے۔ چانسلر انگیلا میرکل کی جماعت سی ڈی یو کی باویریا صوبے میں سسٹر پارٹی سی ایس یو کے جنرل سیکرٹری مارکُس بلومے نے ایک جرمن نشریاتی ادارے سے بات چیت میں کہا ہے کہ جرمنی کو ایردوآن کے اسکولوں کی ضرورت نہیں ہے۔ جرمن حکومت اس وقت ترک حکام کے ساتھ ایک منصوبے پر بات چیت میں مصروف ہے، جس کے تحت فریکنفرٹ، کولون اور برلن میں تین پرائیویٹ ترک اسکول کھولے جانا ہیں۔ جرمن وزیرخارجہ ہائیکو ماس نے اپنے ایک حالیہ انٹرویو میں کہا تھا کہ تین جرمن اسکول ترکی میں قائم ہیں اور ترک حکام اس سے جرمنی سے مساوی رویے کے مظاہرے کا مطالبہ کرتے ہوئے جرمنی میں تین اسکولوں کے قیام کا کہہ رہے ہیں۔