بیروزگاری الاونس اورنام نہاد خستوریا۔۔ عمران ملک

لفظ پارو اسپین میں بیروزگاری الاونس کو کہتے ہیں ۔جو بھی ورکر خواہ وہ سرکاری ملازم ہوں یا پرائیوٹ ایک سال کام پر اس کا بیروزگاری الاونس 4 مہینے بنتا ہے ۔اور آپ زیادہ سے زیادہ ایک مرتبہ لگاتار دوسال تک بیروزگاری الاونس لے سکتے ہیں ۔اگر آپ نے پانچ سال مسلسل کام کیا ہو،اور اگر دوبارہ بیروزگاری الاونس لینا چاہتے ہیں تو آپ کو دوبارہ کام کرنا پڑے گا ۔بیروزگاری الاونس کی مزے کی بات وہ آپ کی تنخواہ کے برابر ہوتا ہے ۔بیروزگاری الاونس دیتے ہوئے گورنمنٹ آپ پر کوئی احسان نہیں کرتی بلکہ یہ آپ کا حق بنتا ہے ۔جو آپ کی ہی تنخواہ سے کاٹا جاتا ہے ۔
لیکن آج ہمارا موضوع کچھ اور ہے ۔
اور ہم آج ایک ایسی مافیا کو بے نقاب کرنے جارہے ہیں ۔جو اپنے 600 کے پیچھے آپ لوگوں کی زندگی تباہ کر دیتی ہے۔لیکن کچھ کیسز میں لوگ بھی اس مافیا کے ساتھ برابر کے شریک ہیں ۔میں اسے لیگل مافیا بھی کہوں گا ۔اور وہ کاام اتنی صفائی سے کرتے ہیں ۔قانون بھی ان پر ہاتھ نہیں ڈال سکتا ۔اللہ تعالی کا خاص کرم ہے ادارہ پاک ائی کیر ایسے کاموں کا حصہ نہیں بنا ۔بیروزگاری الاونس آپ ایک ساتھ اکھٹا بھی اٹھا سکتے ہیں ۔اگر آپ نے کوئی کاروبار کرنا ہوں ۔اور بعض مرتبہ تو حکومت آپ کے کاروبار کو چلانے کے لیے باقاعدہ دو سال تک مدد بھی کرتی ہے ۔مثال کے طور پر آپ کی پارو ایک ہزار یورو بنتی ہے ۔تو آپ بیس ہزار ایک ساتھ اٹھا سکتے ہیں جو لگ بھگ 35 لاکھ پاکستانی بنتے ہیں ۔ہم نے پاکستانی روپے میں کیوں ایسا بتایا اس کا ذکر آگے جا کر کریں گے ۔پارو لینے کے لیے آپ کو ایک پروجیکٹ کی ضرورت ہوتی ہے ۔جس کے لیے تھوڑی بہت مہارت کی ضرورت ہوتی ہے۔اور اکثر ہمارے لوگ نام نہاد خستوریا سے رابطہ کرتے ہیں ۔جو صرف اور صرف ایسے کاموں کے لیے ہی بنائی گئی ہوتی ہیں ۔وہ آپ کو فرضی پروجیکٹ بنا کر پارو 20 دنوں میں آپ کے ہاتھوں میں تھماتے ہیں ۔لیکن ایک سال گزرنے کے بعد جب آپ سے اس 20 ہزار یعنی 35 لاکھ کا گورنمنٹ کی طرف سے سوال اٹھایا جاتا ہے ۔تو آپ وکیلوں کی طرف بھاگتے ہیں ۔اور جب آپ سے سوال کیا جاتا ہے ۔آپ کے پاس کوئی ثبوت ہے ۔کہ آپ نے 35 لاکھ کہاں خرچہ ؟
جواب آتا ہے پینڈ وچ کوٹھی پائی وے ۔تو اگلے مرحلے میں آپ کو وہ بیس ہزار 30 % سود کے ساتھ واپس کرنے کو کہا جاتا ہے اور نہ واپس کرنے کی صورت میں آپ کے اکاونٹ کو منجمد کر دیا جاتا ہے ۔آب تو گورنمنٹ با قاعدہ دھوکے بازی کا کیس بنانے کے بارے میں سوچ رہی ۔لے کر دینے والے نے اپنے 600 یا 1000 یورو لے کر اپنی جیب میں ڈال لینے ہیں اور آپ نے ساری زندگی اس کی سزا کاٹنی ہے ۔اگر آپ کاروبار کرنے میں سنجیدہ ہیں ۔تو پارو لیں ورنہ اجتناب کریں ایسے غلط کاموں سے جو آپ کا سکون تباہ کر دیں ۔ہاں اگر آپ نے کوئی کاروبار کیا اور آپ کی نیت صاف تھی وہ نہ چل سکا اس کی پھر بھی قانونی رعایت ہے ۔لیکن دھوکہ دہی سے لی گئی پارو آپ کے لیے نقصان دے ثابت ہو سکتی ہے ۔ہمارے آفس میں ایسے کیسز کے انبار لگے پڑیں ہیں ۔اور ایک مرتبہ آپ کا انیم ( Anem ) میں ریکارڑ خراب ہو گیا ۔دوبارہ وہ اعتماد بحال کرنا مشکل ہو جائے گا ۔۔۔