کورونا وائرس سے یورپ میں پہلی ہلاکت

کورونا وائرس سے دنیا بھر میں مرنیوالے افراد کی تعداد 1500 سے تجاوز کرگئی، چین میں مزید 143 افراد ہلاک ہوگئے، یورپ میں بھی پہلی ہلاکت رپورٹ ہوگئی۔چین کے قومی صحت کمیشن نے ہفتے کو بتایا ہے کہ ملک بھر میں کورونا وائرس کے مزید 2600 سے زائد کیسز رپورٹ ہوئے جبکہ وائرس کے شکار مزید 143 افراد ہلاک ہوگئے۔رپورٹ کے مطابق یورپ میں بھی کورونا وائرس سے پہلی ہلاکت ہوئی ہے، فرانس کی وزارتِ صحت کے مطابق کورونا وائرس کا مریض ایک چینی سیاح اسپتال میں علاج کے دوران دم توڑ گیا۔چین کی انتظامیہ کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس کے کیسز کی تعداد میں گزشتہ چند روز کے مقابلے میں واضح کمی آئی ہے، چین کے دارالحکومت بیجنگ میں چھٹیوں کے بعد واپس آنیوالے لوگوں کو کہا گیا ہے کہ وہ 14 دن قرنطینہ میں رہیں تاکہ وائرس کا پھیلاؤ روکا جاسکے۔غیر ملکی خبر ایجنسی کے مطابق چین میں کورونا وائرس سے ہونیوالی مزید 143 ہلاکتوں کے بعد مجموعی تعداد 1523 ہوگئی، چین بھر میں اب تک وائرس کے 66 ہزار 492 مجموعی کیسز رپورٹ ہوچکے ہیں۔
چین میں کورونا وائرس سے سب سے زیادہ 1123 ہلاکتیں ووہان میں ہوئیں، صوبہ ہوبئی کے دارالحکومت ووہان کو اس وائرس کے پھیلاؤ کا بڑا مرکز سمجھا جارہا ہے۔چین کے علاوہ دنیا کے 2 درجن سے زائد ملکوں میں کورونا وائرس کے 450 کیسز رپورٹ ہوچکے ہیں، جبکہ 4 افراد اس مرض سے زندگی کی بازی ہار چکے ہیں، جاپان میں جمعرات کو کورونا وائرس سے پہلی ہلاکت ہوئی تھی، اس سے قبل ہانگ کانگ اور فلپائن میں 2 افراد کورونا وائرس سے ہلاک ہوچکے ہیں تاہم آج فرانس میں بھی ایک چینی شہری کورونا وائرس سے ہلاک ہوا۔رپورٹ کے مطابق کورونا وائرس سے ہونیوالی ہلاکتوں کی شرح 2 فیصد ہے، لیکن یہ اس صدی میں پھیلنے والی دیگر بیماریوں کی نسبت بہت تیزی سے پھیل رہا ہے۔الجزیرہ کے مطابق مصر میں بھی کورونا وائرس کے پہلے مریض کی تصدیق ہوگئی، یہ براعظم افریقا کا پہلا کورونا وائرس کیس ہے