اٹلی کورونا وائرس کی لپیٹ میں گیارہ ہلاک،اٹلی اقتصادی بحران کا خطرہ

اٹلی(دوست مانیٹرنگ دیسک)اٹلی یورپ کا پہلا ملک جس میں کرونا وائرس سے مرنے والوں کی تعداد ١١ ہو گئی ہے ۔ اٹلی میں کرونا وائرس کے کم وبیش 322کیسز سامنے آگئے ہیںجن میں کودونیو ، لمبارڈیا ، اور وینیتو جیسے زون شامل ہیں ۔ کودنیو میں ایک اطالوی شہری کی وجہ سے دوسرے شہریوں کو وائرس ملا جس میں پانچ میڈیکل اسٹاف ، نرسز اور ڈاکٹر ز بھی اس کا شکار ہوگئے ہیں کودونیو شہر کے مئیر نے آرڈر جاری کیا ہے کہ تمام ریسٹورنٹ ، کافی بارز ، سکول ، ڈسکو ،اور کھیلوں کے میدان جہاں بھی لوگ اکٹھے ہوتے ہیں انہیں بند کردیا جائے ۔ کازل پوستر لینگو میں سکول بند ہوگئے ہیں ۔ ۔ کاستالیونے دی آدا نے اپنی لائبریریاں ، سرکاری دفاتر ، وغیرہ بند کر دئیے ہیں ۔میلان کے دس ٹاﺅن ، کاسیل پوستر لینگو، کودنیو ، کاستیلیونے دی آدا، فومبیو ، مالیو ، سومالیہ ، برتونیکو، تیرا نووا ، کاستیل گریندو اور سان فیورنو بھی مکمل بند ہونے جا رہے ہیں۔
اٹلی کے صوبہ ایمیلیا رومانیہ میں بھی یکم مارچ تک تمام اسکولوں، یونیورسٹیوں کو بند کرنے کے احکامات جاری کردیے گئے ۔اٹلی میں کو رونا وائرس کے خلاف مدد کے لئے اطالوی فوج نے اپنے 3412بیڈ اور ایک ہزار سےزائد کمرے اور ائیر فورس نے 1750 کمرے دئیے ہیں تاکہ بوقت ضرورت مریضوں کو ٹھہرانے کا انتظام کیا جا سکے۔کورونا وائرس میلان شئیر مارکیٹ 5.4فیصد نیچے گر گئی ۔ اٹلی اقتصادی بحران کا خطرہ